7

نہرو یونیورسٹی کے طلبا کی حمایت پر اسمرتی ایرانی کی دپیکا پر شدید تنقید

دہلی: بالی ووڈ  اداکارہ و سیاستدان اسمرتی ایرانی نے دپیکا پڈوکون کو جواہر لعل نہرو یونیورسٹی کے طلبا کا ساتھ دینے پر آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے شدید تنقید کا نشانہ بنایا ہے۔بھارتی دار الحکومت دہلی کی معروف یونیورسٹی جواہر لعل نہرو کے طلبا پر گزشتہ اتوار کو آر ایس ایس کے غنڈوں نے اچانک دھاوا بول دیا تھا۔ اس حملے میں 30 سے زائد طلبا و اساتذہ شدید زخمی ہوئے تھے۔ طلبا پر  آر ایس ایس اور بی جے پی کے غنڈوں کے حملے کے باعث بھارت کی اندرونی صورتحال انتہائی کشیدہ ہوگئی اور ملک بھر میں مظاہرے پھوٹ پڑے ہیں۔ یہاں تک کہ بالی ووڈ فنکار بھی طلبا کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے اٹھ کھرے ہوئے ہیں۔واقعے کے بعد اداکارہ دپیکا پڈوکون یونیورسٹی کے طالبعلموں کے ساتھ اظہار یکجہتی کے لیے احتجاج میں پہنچ گئیں تاہم انتہاپسندوں  کو دپیکا کا طلباکا ساتھ دینا ایک آنکھ نہ بھایا اور ٹوئٹر پر ان  کے خلاف مہم شروع ہوگئی۔ حال ہی میں بھارتی ٹی وی کی اداکارہ اور بھارت کی مرکزی کابینہ کی وزیر و حکمران جماعت بی جے پی کی کارکن اسمرتی ایرانی نے دپیکا پڈوکون کو طلبا کا ساتھ دینے پر آڑے ہاتھوں لیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں