32

قیامت سے پہلے قیامت ، اسلام آباد میں دو سالہ معصوم بچی کا ریپ کر دیا گیا

اسلام آباد (عباس ملک ) اسلام آ باد کے علاقے بارہ کہو میں 2 سالہ معصوم بچی کو مبینہ طور پر جنسی زیادتی کا نشانہ بنانے کے الزام میں ایک شخص کو گرفتار کر لیا گیاہے ۔ تفصیلات کے مطابق ایف آئی آر میں کہا گیاہے کہ دوسالہ بچی ہمسائے میں صبح اپنے دادا دادی کے گھر گئی تھی لیکن کچھ دیر کے بعد اس کی والدہ اس کو دیکھنے کیلئے گئی تو بچی نہیں ملی تاہم چھوٹی معصوم بچی ایک دوسرے گھر سے روتی ہوئی باہر نکلی ۔ بچی کے والدین جلدی سے اس گھر کے اندر داخل ہوئے جہاں سے روتی ہوئی بچی باہر آئی تھی تاہم اس گھر میں موجود ایک شخص باتھ روم میں چھپ گیا تھا ۔ جب خاتون نے دروازہ کھٹکٹایا اور جب وہ باہر آیا توا س نے فوری سے یہ کہنا شروع کر دیا کہ میں نے کچھ نہیں کیا ، لڑکی کی والدہ کا کہناہے کہ اس کی بیٹی کے کپڑوں پر خون کے دھبے تھے اور وہ اپنی بیٹی کو ہسپتال لے گئے اور ڈاکٹرنے انہیں فوری طور پر پولیس سے رابطہ کرنے کی ہدایت کی ۔ بچی کو اسلام آباد میں پولی کلینک لے جایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے دو سالہ بچی کے ساتھ جنسی زیادتی کی تصدیق کر دی ہے ۔پولیس نے مقدمہ درج کرتے ہوئے ملزم کو گرفتار کر لیا تاہم پولیس کی جانب سے بچی کی تفصیلی میڈیکل رپورٹ کا انتظار کیا جارہاہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں