31

چکن پوکس میں مبتلا محمد عامرکی ورلڈ کپ میں شرکت مشکوک

لاہور: چکن پوکس میں مبتلا فاسٹ بالر محمد عامر کی ورلڈ کپ میں شرکت مشکوک ہو گئی ہے جو تیسرے ون ڈے میں بھی پاکستان کی نمائندگی نہیں کر سکیں گے ۔ذرائع کے مطابق وہ وارل انفیکشن کے سبب دوسرے ون ڈے میں بھی شرکت نہیں کر سکے تھے اور اگرچہ ان کی ورلڈ کپ کے حتمی اسکواڈ میں شمولیت انگلینڈ کیخلاف میچوں میں عمدہ کارکردگی سے مشروط ہے لیکن بدقسمتی سے ان کا وائرل انفیکشن شدت اختیار کرتا جا رہا ہے جس پر ٹیم انتظامیہ کو پریشانی لاحق ہے کیونکہ میڈیکل رپورٹس میں تصدیق ہوئی ہے کہ وہ چکن پوکس میں مبتلا ہیں جس کے سبب ڈاکٹروں نے انہیں کم از کم پانچ روز مکمل آرام کا مشورہ دیا ہے ۔اگر دیکھا جائے تو قسمت ان کا ساتھ نہیں دے رہی اور ممکنہ طور پر محمد عامر مسلسل تیسرے ورلڈ کپ سے محروم ہو سکتے ہیں کیونکہ گزشتہ دو ورلڈ کپ ٹورنامنٹس اسپاٹ فکسنگ کی پابندی کی نذر ہو چکے ہیں۔ واضح رہے کہ بائیں ہاتھ کے پیسر پہلے ون ڈے تک بالکل ٹھیک تھے جہاں انہیں بارش کی وجہ سے بالنگ کا موقع نہیں مل سکا جبکہ دوسرا ون ڈے انہیں وائرل انفیکشن کی وجہ سے چھوڑنا پڑا اور اب وہ آج بھی بیماری کے سبب میدان میں اترنے سے قاصر رہیں گے ۔ورلڈ کپ اسکواڈز میں کوئی بھی تبدیلی 23 مئی تک ممکن ہے اور اگر محمد عامر ایک ہفتے آرام کے باعث انگلینڈ کیخلاف باقی ون ڈے میچز سے بھی محروم رہے تو سلیکٹرز کے پاس کوئی جواز نہیں ہوگا کہ انہیں ورلڈ کپ اسکواڈ میں شامل کر سکیں کیونکہ ان کی شمولیت بہتر کارکردگی سے مشروط تھی اور محسوس یہی ہوتا ہے کہ ان کیلئے ورلڈ کپ تک رسائی کا راستہ کم و بیش بند ہوتا جا رہا ہے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں