88

سسرالیوں کے ظلم کا شکار خاتون اور بھائیوں پر پولیس کا تشدد

فیصل آباد: سسرالیوں کے تشدد کا شکار خاتون اور اس کے بھائیوں کو چوکی انچارج نے تشدد و نشانہ بناڈالا ، غلیظ گالیاں دیتے ہوئے دھمکیاں دی گئیں، درخواست واپس لینے پرمجبور کیا جاتا رہا، اعلیٰ حکام سے انصاف کا مطالبہ کیا گیا ہے ، دنیا نیوز آفس آنے والی چھوٹا مانانوالہ اظہر ٹاون کی رہائشی سحرش بی بی نے روتے ہوئے بتایاکہ اس کے شوہر اعجاز علی اور سسرالیوں امتیاز، ریاض وغیرہ نے اس کو بہیمانہ تشدد کانشانہ بنایا اور چھری کے وار کرکے زخمی کرکے گھر سے نکال دیا تھا جن کیخلاف تھانہ ملت ٹائون میں درخواست دی گئی اور چوکی بھائیوالا میں گئی تو چوکی انچارج حماد یوسف نے مخالف پارٹی کی حمایت کرتے ہوئے مجھے انتہائی غلیظ گالیاں دیں اور میرے دونوں بھائیوں مدثر اور اعجاز کو ساری رات چوکی میں کھڑے کئے رکھا متاثرہ خاتون نے ریجنل پولیس افسر اور سی پی او سے مطالبہ کیا ہے کہ چوکی انچارج اور سسرالیوں کے خلاف سخت ترین قانونی کارروائی عمل میں لاتے ہوئے اسے انصاف فراہم کیا جائے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں