7

عمران خان چند روز میں خود این آر او مانگتے پھریں گے :‌ مریم نواز

ظفر وال: مسلم لیگ ن کی نائب صد ر مریم نواز نے کہا ہے وزیراعظم عمران خان عوام کومشکل میں ڈال کرلندن فرارہوجائیں گے ۔وزیراعظم کی حیثیت نہیں کہ وہ کسی کو این آر او دیں، عمران خان چند روز میں خود این آر او مانگتے پھریں گے ۔ نواز شریف‘‘ ہاں’’ کر دیں تو 100این آر او ان کی جھولی میں ہونگے ۔پرویز مشرف کیخلاف تحقیقات کرتے ہوئے عمران خان کے پر جلتے ہیں،وزیر اعظم نے رات کو بارہ بجے پتا نہیں کس ضرورت کے تحت خطاب کیا؟ نیا پاکستان بننے ہی والا تھا کہ پیچھے سے اچانک آواز بند کر دی گئی۔2018کا الیکشن چوری کیاگیا ، بجٹ میں عوام پر قیامت ڈھا دی گئی،کوئی بھی غریب پرسکون زندگی نہیں گزار رہا،ملک میں ریڑھی بان سمیت کوئی بھی خوش نہیں،گرفتاریاں عمران خان کے خوف کی عکاس ہیں۔ پی ٹی آئی کی حکومت کیخلاف جلددما دم مست قلندر ہوگا ۔ وہ ظفر وال میں جلسے سے خطاب کر رہی تھیں ۔ انہو ں نے کہا عمران خان کوصرف گونہیں کہناگھرتک چھوڑکرآناہے ،نیب کوشہبازشریف،حمزہ شہباز،شاہدخاقان،سعدرفیق نظرآتے ہیں،وزرانہیں،300کنال کے گھرمیں رہنے والاایک لاکھ روپے ٹیکس دیتاہے ۔ بنی گالاکاگھربغیراین اوسی کے بنا،آپ کی کوئی حیثیت نہیں کہ کسی کواین آر او دیں،چندروزمیں آپ خوداین آراومانگتے پھریں گے ،نوازشریف چاہتے توایک نہیں100این آراوان کی جھولی میں پھینک دیئے جاتے ،نوازشریف آج بھی جیل میں ڈٹ کرکھڑے ہیں،چوردروازے سے اقتدارمیں آنیوالے کوعوام کے دردکااحساس نہیں ہوتا،لوڈشیڈنگ ہم نے ختم کی،آپ کس بات کاکریڈٹ لیتے ہیں۔مشرف کی تحقیقات کرتے ہوئے عمران نیازی کے پرجلتے ہیں،نیازی صاحب 10سال قبل کی تحقیقات کیوں نہیں کرتے کہ اس وقت مشرف تھا،اس جعلی حکومت کوآئے 10 ماہ ہوگئے ہیں، عمران خان کی دیدہ دلیری تودیکھیں اپنے وزیرکولوڈشیڈنگ ختم کرنے کی مبارکباددے رہے ہیں ۔ عمران خان عوام کومشکل میں ڈال کرلندن فرارہوجائیں گے ۔ عمران خان کوپتا ہے پہلی اورآخری مرتبہ اقتدارمیں آیا ہے ۔عمران خان نے کبھی کوئی کاروبارنہیں کیا،کبھی کوئی نوکری نہیں کی۔مریم نواز کا کہنا تھا جس دن سے نواز شریف کو وزارت عظمیٰ سے ہٹایا گیا ہے اس دن سے ملک کی تباہی شروع ہوگئی ، بجٹ میں عوام پر قیامت ٹوٹی ہے ، نالائق اعظم ٹیکس کے خرچے پر سارے خاندان کو عمرہ کرانے لے گئے جبکہ پاکستان کے وزیر خارجہ کو سرکاری جہاز میں نہیں بٹھایا گیا کیونکہ جہاز پر عمران خان کے خاندان والوں اور ذاتی دوستوں کا قبضہ تھا۔آج وہ شخص قانون سے بالا تر ہے جو اشتہاری مجرم ہونے کے باوجود وزیرا عظم کیخلاف درخواستیں لے کر جاتا تھا اور ججز پر پریشر ڈالنے کیلئے عدالت میں کھڑا ہوتا تھا لیکن کسی میں اتنی ہمت نہیں تھی کہ اس پر ہاتھ ڈالے ۔ ڈرپوک اعظم نے صدر کے ذریعے جسٹس قاضی فائز عیسیٰ جیسے شفاف جج کیخلاف ریفرنس دائر کرایا۔ نالائق اعظم سے جب آلو پیاز مہنگا ہونے کا پوچھا جائے گا تو کہیں گے کہ نواز شریف کو گرفتار کر لیا ہے ، جب فاقوں کا پوچھو گے تو جواب دیں گے کہ حمزہ شہباز کو گرفتار کر لیا ہے ۔مریم نواز نے کہا جس نے ساری عمر دوسروں کی جیبوں کا کھایا ہو اسے کیا پتا عام آدمی کیسے گزارا کرتا ہے ؟، علیمہ خان کا واحد ذریعہ معاش سلائی مشین ہے ، علیمہ خان نے اقبال جرم کیا اور جرمانہ ادا کیا، نیب مریم نواز کو توپکڑ لیتا ہے لیکن اعتراف جرم کرنیوالی علیمہ خان کو نہیں پکڑتا۔ قبل ازیں مریم نواز نے ظفر وال میں تھیلیسیمیامیں مبتلا ن لیگی کارکن ذکی الرحمن کے گھر جاکر ان کی عیادت کی اور ان سے نواز شریف اور حمزہ شہباز کیلئے خصوصی دعا کرنے کا کہا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں