12

امریکا میں بزنس کرنا آسان ہے ، ڈاکٹر ملیحہ لودھی

کراچی: اقوام متحدہ میں پاکستان کی مستقل مندوب ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے کہا ہے کہ امریکا میں بزنس کرنا آسان ہے ، یہاں بزنس مینوں کو کسی بھی قسم کی تکالیف کا سامنا نہیں ہے ،پاکستان اور امریکا کے مابین تجارت بڑھنے کے وسیع مواقع موجود ہیں ،پاکستان کا نجی شعبہ یہاں آئے اور امریکی بزنس مینوں سے باہمی تجارت کو فروغ دے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے پاکستان سے امریکا کے دورے پر آئے ہوئے ایف پی سی سی آئی کے سابق صدر اور یونائیٹڈ بزنس گروپ کے سیکریٹری جنرل زبیرایف طفیل سے گفتگو کے دوران کیا۔ زبیرایف طفیل نے نیویارک میں ڈاکٹر ملیحہ لودھی سے ان کے آفس میں ملاقات کی۔ زبیرطفیل کے ہمراہ یونائیٹڈ بزنس گروپ کے چیف کوآرڈینیٹرملک سہیل حسین بھی موجود تھے ۔ڈاکٹر ملیحہ لودھی نے کہا کہ پرائیویٹ سیکٹر کے لوگ امریکا میں بہت کام کرسکتے ہیں،پاکستان اور امریکا کے درمیان تجارت بڑھنے کے بہت مواقع ہیں لیکن اس میں نمایاں کردار پاکستان کے نجی شعبے کو ادا کرنا ہوگا،ایف پی سی سی آئی کو چاہیئے کہ وہ آگے بڑھ کر دوطرفہ تجارت اور امریکا کے تاجروں کے ساتھ رابطوں کیلئے کام کرے۔ انہوں نے کہا کہ یو ایس اے ایک اوپن اکنامی ہے اور یہاں آکر کاروبار بڑھانے کے فائدے اٹھائیں۔ زبیر طفیل نے کہا کہ ایف پی سی سی آئی پاکستانی بزنس مینوں اور ایکسپورٹرزکیلئے آسانیاں پیدا کرنے کیلئے موثر انداز میں کام کررہا ہے اور ہماری کوشش ہے کہ پاکستان سے تجارتی وفود امریکا آئیں اور یہاں کی مارکیٹوں کا جائزہ لیں۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں