6

افغان صدر کی آج اسلام آباد آمد، صدر، وزیراعظم سے ملاقات کرینگے

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کی دعوت پر افغان صدر اشرف غنی آج دو روزہ دورے پر پاکستان پہنچیں گے۔ افغان وزرا، مشیران، سینئر عہدیداران اور کاروباری شخصیات سمیت اعلیٰ سطح کا وفد بھی ان کے ہمراہ ہو گا۔ ترجمان دفتر خارجہ کی جانب سے جاری تفصیلات کے مطابق افغان صدر اپنے دورہ کے دوران صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے ملاقات جبکہ وزیراعظم عمران خان سے وفود کی سطح پر مذاکرات بھی کریں گے۔ طرفین کے درمیان وسیع تر گفت و شنید میں سیاسی، تجارتی، معاشی، سکیورٹی، امن و مفاہمت، تعلیم اور عوامی سطح پر تبادلوں سمیت مختلف شعبوں میں دو طرفہ تعاون کو تقویت دینے پر توجہ مرکوز کی جائے گی، افغان صدر عسکری حکام سے بھی ملاقات کرینگے۔ صدر اشرف غنی لاہور کا دورہ بھی کریں گے جہاں وہ بزنس فورم میں شریک ہوں گے جس میں دونوں ممالک کے کاروباری نمائندے موجود ہونگے۔ یہ افغان صدر کا پاکستان کا تیسرا دورہ ہو گا جو حال ہی میں امن و استحکام کیلئے افغانستان پاکستان ایکشن پلان کے پہلے جائزہ اجلاس کے بعد کیا جا رہا ہے۔ حالیہ ہفتوں میں دیگر اہم دو طرفہ تبادلوں میں صدر اشرف غنی اور وزیراعظم عمران خان کے درمیان ٹیلیفون پر بات چیت، مکہ میں او آئی سی سربراہ اجلاس کے موقع پر دونوں رہنماؤں کے درمیان ملاقات اور افغان قومی سلامتی مشیر اور پاکستان کیلئے وزیر برائے مہاجرین کے دورے شامل ہیں۔ ادھر افغان ٹی وی کے مطابق صدارتی ترجمان ہارون چاخان سوری نے کہا صدر اشرف غنی پاکستانی وزیراعظم عمران خان کے ساتھ ملاقات میں چار اہم امور پر تبادلہ خیال کریں گے۔ ترجمان کا کہنا تھا پاکستانی قیادت کے ساتھ ملاقات میں سکیورٹی، طالبان کے ساتھ امن مذاکرات، علاقائی رابطے، تجارتی تعاون اور سرمایہ کاری پر تبادلہ خیال کیا جائے گا۔ افغان حکومت کا کہنا ہے صدر اشرف غنی کا دورہ اس بات کو جاننے میں مدد دیگا کہ پاکستان کس طرح افغان امن عمل میں شرکت کرسکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں