23

پنجاب پولیس کے مزاج وکھرے ہیں ، نہ آﺅ دیکھتے ہیں نہ ہی تاﺅ بس جو دل میں آیا وہی کرتے ہیں

ساہیوال : پنجاب پولیس کے مزاج وکھرے ہیں ، نہ آﺅ دیکھتے ہیں نہ ہی تاﺅ بس جو دل میں آیا وہی کرتے ہیں لیکن اس پولیس اہلکار کو نیم برہنہ ہو کر تھانے میں خواتین کے سامنے بیٹھنا مہنگا پڑ گیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق یہ نوجوان پولیس اہلکار دراصل عہدے میں ” اے ایس آئی “ ہیں ، اس کا نام منیر ہے اور ان کا تعلق ساہیوال کے تھانہ یوسف والا سے ہے چونکہ ملک اس وقت لوڈشیڈنگ اپنے عروج پر ہے تو اسی پریشانی کے باعث انہوں نے تھانے میں اپنی قمیض اتاری اور محض ایک ’ دھوتی ‘ باندھ کر تھانے میں کرسی پر براجمان ہو گئے جیسے وہ اپنے ڈیرے پر موجود ہوں ۔ انہوں نے یہ بھی دیکھا کہ اس تھانے میں خواتین اہلکار موجود ہیں اور اپنے سرکاری کاموں کے سلسلے میں دیگر خواتین سائلین بھی آتی جاتی ہیں تاہم کسی بہادر سوشل میڈیا صارف نے یہ ذمہ داری اٹھائی اور ایسے غیر ذمہ دارپولیس اہلکاروں کو سبق دینے کیلئے ان کی تصویر سوشل میڈیا پر ڈال دی جو کہ دیکھتے ہی دیکھتے شدید وائرل ہو گئی ۔اس تصویر میں آپ دیکھ سکتے ہیں وہ پولیس اہلکار خاتون کے دستاویزات کا جائزہ لے رہاہے جبکہ ان کے پیچھے ایک خاتون پولیس اہلکار بھی موجود ہیں ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں