27

” ایسے برتاؤ کیا جا رہا ہے جیسے یہ کوئی جانور ہیں جنہیں پنجروں . . .” مقبوضہ کشمیر کی سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی کی صاحبزادی نے بھی خاموشی توڑ دی

سری نگر : سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی کی بیٹی التجا جاوید کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں شہریوں کے ساتھ ایسے برتاؤ کیا جا رہا ہے جیسے یہ کوئی جانور ہیں جنہیں پنجروں میں بند کیا گیا ہے، انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں جاری ہیں۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بھارتی وزیر داخلہ امیت شاہ کو ایک خط میں لکھتے ہوئے کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ آپ لوگ آزادی منا رہے ہیں اور کشمیریوں کو جانوروں کی طرح گھروں میں بند کیا ہوا ہے، مجھے اپنے گھر سے باہر جانے کی بھی اجازت نہیں دی جا رہی۔التجا جاوید کا کہنا تھا کہ وزیر داخلہ امیت شاہ اس بات کی وضاحت کریں کرفیو کیوں ہے، میرے ایک انٹرویو کے دوران بھارتی سکیورٹی اہلکار کے میرے پاس بیٹھے ہوئے تھے، دھمکیوں جیسے عمل سے میں ڈرنے والی نہیں میں لکھتی اور بولتی رہوں گی۔میرے ساتھ ایسے برتاؤ کیا جا رہا ہے جیسے میں نے کوئی جنگی جرم کیا ہے۔محبوبہ مفتی کی بیٹی کا مزید کہنا تھا کہ میری والدہ کو گرفتار کیا گیا ہے، انہیں اپنے وکیل اور پارٹی رہنماؤں سے بھی ملنے نہیں دیا جا رہا۔ مجھے گھر پر عملاً نظر بند کیا ہوا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں